Show download pdf controls
  • آپ نے جو ریکارڈ رکھنے ہیں

    آپ نے جس تاریخ سے اپنے ٹیکس ریٹرن جمع کروائے ہیں، تب سے آپ کو پانچ برس (اکثرصورتوں میں) تک ریکارڈ رکھنے کی ضرورت ہے۔ ریکارڈ میں اسٹیٹمنٹس ، ادائیگی کے خلاصے اور رسیدیں شامل ہوسکتی ہیں۔ آمدنی کے سال کے دوران آپ کو ایسے دستاویزات وصول ہوں گے جو آپ کے ٹیکس کے لیے ضروری ہوتےہیں۔

    پوسٹر کے فارمیٹ میں اس معلومات کا خلاصہ دیکھنے کے لیے ، ملاحضہ کریں وہ ریکارڈ جو آپ نے رکھنا ہے- ریکارڈ کو واضح اور صاف رکھیں (پی ڈی ایف، 894 کے بی) This link will download a file۔

    اس صفحہ پر:

    ریکارڈ رکھنے کی اہمیت

    ریکارڈ کو بہتر انداز میں رکھنے سے آپ کو اور آپ کےٹیکس ایڈوائیزر کو مدد ملتی ہے:

    • اپنی آمدنی اور اخراجات کا تحریری ثبوت دینے کے لیے
    • اپنے ٹیکس ریٹرن تیار کرنے کےلیے
    • اس بات کی یقین دہانی کے لیے کہ آپ اپنے تمام حقوق کا دعویٰ کرنے کے اہل ہیں
    • اپنے ٹیکس رٹرن میں فراہم کردہ معلومات کو ثابت کرنے کے لیے(ایسی صورت میں کہ جب ہم آپ سے طلب کریں)
    • ٹیکس آڈٹ اور اجسٹمنٹ کے خطرے کو کم کرنے کے لیے
    • ہماری ساتھ ابلاغ کو بہتر بنانے کے لیے
    • آپ کی تشخیص اور اجسٹمنٹ سے متعلق تنازعہ کے مسائل کو حل کرنے کے لیے
    • جرمانے سے بچنے کے لیے

    ریکارڈ کو بہتر رکھنے سے آپ کے ٹیکس کے معاملات کو سنبھالنے پر آنے والے اخراجات میں بھی کمی آتی ہے۔ اگر آپ ٹیکس ایڈوائیزر کی خدمات استعمال کرتے ہیں، تو آپ کے ریکارڈ کی درجہ بندی کرنے اور اس کو تیار کرنے میں ان کے وقت کی بھی بچت ہوتی ہے۔ اس سے ان کو آپ کے حقوق کے دعویٰ کرنے کے لیے بھی زیادہ وقت مل جاتا ہے:

    یہ بھی ملاحضہ کریں:

    آپ کو اپنا ریکارڈ کتنے عرصہ تک رکھنا چاہیئے

    آپ نے جس تاریخ سے اپنے ٹیکس ریٹرن جمع کروائے ہیں، تب سے آپ کو پانچ برس تک لازمی طور پر اپنے تحریری شواہد رکھنے چاہیئیں۔

    کچھ مخصوص صورتیں بھی ہیں۔ اگر آپ:

    • ایسے اثاثے جن کی قدر میں کمی آرہی ہو ان کے لیے قدر میں کمی کی منہائی کا دعویٰ کریں- قدر میں کمی کے دعوے کی آخری تاریخ سے لے کر پانچ برس تک اپنا ریکارڈ رکھیں
    • اثاثے کی خریداری یا فروخت- اس بات کی یقین دہانی ہوجانے کے بعد کہ اب کوئی بھی کیپٹل گینز ٹیکس (CGT) کا عمل نہیں ہوگا،پانچ برس تک ریکارڈ رکھیں
    • ہمارے ساتھ تنازع چل رہا ہے- تو ریکارڈ رکھیں    
      • آپ نے جس تاریخ سے اپنے ٹیکس ریٹرن جمع کروائے ہیں، تب سے پانچ برس تک
      • تنازع حل نے کی تاریخ سے پانچ برس تک۔
       

    آپ کے ریکارڈ کا فارمیٹ

    اپنا ریکارڈ کاغذیا پھر ڈجیٹل فارمیٹ میں رکھیں۔ اگر آپ کاغذپر یا ڈجیٹل صورت میں نقول بناتے ہیں، تو ان کو لازمی طور پر اصل دستاویز کی درست اور واضح نقل ہونا چاہیئے۔

    ہمارا مشورہ ہے کہ آپ اپنے تمام ڈجیٹل ریکارڈ کا بیک اَپ بھی رکھا کریں۔

    آپ کے دستاویزات کو انگریزی زبان میں ہونا چاہیئے، تاوقتیکہ آپ کے اخراجات آسٹریلیا سے باہر ہوئے ہیں۔

    اگر آپ منہائی کا دعویٰ کرتے ہیں، توآپ کے پاس لازمی طور پر یہ ریکارڈ ہونا چاہیئے کہ آپ اپنے دعویٰ کس بنیاد پرکر رہے ہیں۔ ریکارڈ عموماًسامان یا خدمات کے حصول کے بعد سپلائر کی جانب سے رسیدوں کی صورت میں ہوتا ہے۔ ایک رسید میں لازمی طور پر ہونا چاہیئے:

    • سپلائر کانام
    • جتنی رقم خرچ ہوئی
    • سامان یا خدمات کی نوعیت
    • وہ تاریخ جس پر خرچ ادا کیا گیا
    • دستاویز کی تاریخ۔

    جو ریکارڈ آپ کو رکھنا ہے ان کی مثالیں

    جو ریکارڈ آپ کو رکھنا ہے ان کی مثالوں میں شامل ہیں:

    • آپ کے آجر یاServices Australia کی جانب سے انکم اسٹیٹمنٹ یا ادائیگی کے خلاصے۔
    • آپ کے بینک یا دیگر مالیاتی اداروں کی جانب سے اسٹیٹمنٹس جن میں یہ دکھایا گیا ہو کہ آپ نے آمدنی کے سال کے دوران کتنا سود کمایا ہے۔
    • ڈیویڈینڈ کی اسٹیٹمنٹس
    • دیکھ بھال کردہ انویسٹمنٹ فنڈز کے خلاصے
    • سامان یا اثاثہ جات کی خریداری یا فروخت کے رسیدیں یا انوائسز
    • دعووں یا مرمت کے اخراجات کی رسیدیں یا انوائسز
    • روابط
    • کرایہ کے ریکارڈ۔

    کام سے متعلق آپ کے اخراجات کے دعوے کی مجموعی رقم اگر$300 سے زیادہ ہے، تو اپنے دعوے ثابت کرنے کے لیے آپ کے پاس لازمی طور پر تحریری شواہد ہونے چاہیئیں۔

    اگر آپ اصل اثاثہ حاصل کرتے ہیں- مثال کے طور پراپرٹی میں سرمایہ کاری، حصص یا دیکھ بھال کردہ انویسٹمنٹ فنڈز- تو ایسی صورت میں فوری طورپر ریکارڈ رکھنا شروع کردیں، کیوں کہ مستقبل میں اگر آپ اپنا اثاثہ فروخت کرتے ہیں تو آپ کو کیپٹل گینز ٹیکس ادا کرنا پڑسکتاہے۔ شروع سے اگر ریکارڈ رکھیں گے تو اس سے آپ کو یہ اطمنان رہے گا کہ آپ کو ضرورت سے زیادہ ٹیکس ادا نہیں کرنا پڑے گا۔

    اگر آپ قدر میں کمی آنے والے ایسے اثاثہ جات کی لاگت کا دعویٰ کر رہے ہیں کہ جن کوآپ نے اپنےکا م کے لیے استعمال کیا ہے،مثلاًلیپ ٹاپ وغیرہ، تو پھر اپنےحتمی دعوے سے لے کر پانچ برس تک آپ لازمی طور پر اپنا ریکارڈ رکھنا چاہیئے۔

    • خریداری کی رسیدیں اور قدر میں آنے والی کمی کا نظام الااوقات
    • اس بات کی تفصیل کہ آپ نے قدر میں کمی کے دعوے کا تخمینہ کس طرح لگایا ہے۔

    ہم آپ کو پانچ سال کے دوران کا ریکارڈ دکھانے کا بھی کہ سکتے ہیں، یہ بہت ضروری ہے کہ آپ کے پاس اپنے دعوے کے حق میں مناسب ثبوت موجود ہوں۔

    یہ بھی ملاحضہ کریں:

    ریکارڈ رکھنے کا ٹولmyDeductions

    آپ جو ریکارڈ رکھتے ہیں اس کے لیے ضروری نہیں کہ وہ کاغذ کی صورت میں ہی ہو۔myDeductions ایک ریکارڈ رکھنے والا ٹول ہے، جس کے ذریعے آپ باآسانی ڈجیٹل طریقے سے اپنا ریکارڈ رکھ سکتے ہیں۔

    آپ برقی طور پر جو ریکارڈ محفوظ کرتے ہیں ہم ان کی شناخت دستاویزات کے طور پر کرتے ہیں، اس میں آپ کی رسیدوں کی تصاویر شامل ہیں۔

    ایسےتنہا کاروبار کرنے والے افراد جن کے معاملات سادہ سے ہوں ،وہ بھی اپنے کاروبار کی آمدنی اور اخراجات کا ریکارڈ رکھنے کے لیے اس کو استعمال کرسکتے ہیں۔

    آپmyDeductions ٹول کے ذریعے اپنا ریکارڈ اَپ لوڈ کرسکتے ہیں اور اپنےmyTax رٹرنز کو پہلے سے پُر کرسکتے ہیں۔ اگر آپ کسی رجسٹرشدہ ٹیکس ایجنٹ کی خدمات استعمال کرتے ہیں، تو آپ اپنا ریکارڈ براہِ راست ان کو ای میل بھی کرسکتے ہیں۔

    myDeductions ٹول کے ذریعے آپ آمدنی سال کے دوران اپنا ریکارڈ ڈجیٹل انداز میں ایک جگہ پر رکھ سکتے ہیں ، برائے:

    • کام سے متعلق تمام اخراجات کے لیے (بشمول کار کے سفر)
    • سود اور ڈویڈینڈ کی منہائی
    • تحائف اور خیراتیں
    • ٹیکس کے معاملات کی دیکھ بھال پر آنے والے اخراجات
    • تنہاکاروبار کرنے والے کے اخراجات اور کاروباری آمدنی
    • دیگر منہائی

    Watch: A quick demonstration of myDeductions

     

    یہ بھی ملاحضہ کریں:

    ریکارڈ رکھنے کی استثنائیں

    چیزوں کو سادہ رکھنے کے لیے ریکارڈ رکھنے کی استثنائیں بھی دستیاب ہیں- ان سے آپ خودکار طور پر منہائی کا دعویٰ نہیں کرسکتے۔

    بعض صورتوں میں ہوسکتاہے کہ آپ کو رسیدوں کی ضرورت نہ پڑتی ہو، تاہم پھر بھی آپ کو یہ دکھانا پڑسکتا ہے کہ آپ نے رقم خرچ کی ہے اور یہ کہ آپ اپنا دعویٰ کس طرح کر رہے ہیں۔

    اگر آپ سپلائر سے رسید حاصل نہیں کرسکتے، لیکن اگر آپ کے شواہد کی نوعیت اور معیارسے مطمئن کردیں کہ آپ نے رقم خرچ کی ہے اور آپ منہائی کے دعوے کے حقدار ہیں تو پھر بھی آپ منہائی کا دعویٰ کرسکتے ہیں۔ آپ کے اخراجات کے شواہد میں بینک یا کریڈٹ کارڈ کی اسٹیٹمنٹ شامل ہوسکتی ہیں کہ جن میں یہ دکھایا گیا ہو کہ آپ نے رقم خرچ کی ہےاور یہ کہ وہ رقم کب اور کس کو ادا کی گئی ۔ اس کے علاوہ دیگر ایسے دستاویزات جو سامان یا خدمات کی نوعیت کو دکھا پائیں۔

    اگر آپ سپلائر کو نقد صورت میں ادائیگی کرتے ہیں اور آپ کے پاس اپنے دعوے کے حق میں کوئی دوسرا دستاویز نہیں ہے تو پھر ایسی صورت میں آپ کے پاس منہائی کے دعوےکافی ثبوت نہیں ہوگا۔

    ایسا ریکارڈ جو کھو گیا ہے یا برباد ہوگیا ہے

    اگر آپ کا ریکارڈ حادثاتی طور پر کھو گیا ہے یا برباد ہوگیا ہے، مثلاًنقب زنی میں یا کسی حادثے وغیرہ میں تو پھر ایسی صورت میں آپ بعض اخراجات کی مد میں منہائی کا دعویٰ کر سکتے ہیں۔ اگر آپ:

    • اپنے کھو گئے یا برباد ہوگئے ریکارڈ کی مکمل نقل فراہم کریں
    • مطمئن کردیں کہ آپ نے ریکارڈ کے کھوجانے یا برباد ہوجانےکو روکنے کے لیے معقول حد تک احتیاطی تدابیر اختیا کی تھیں اور معقول طور پر ریکارڈ کی نقل حاصل کرپانا ممکن نہیں ہے۔

    یہ بھی ملاحضہ کریں:

      Last modified: 26 Jul 2021QC 66481